کے پی حکومت کا اسلام اباد کے طرز پر پشاور میں قبرستان کیلئے اراضی مختص کرنے کی ہدایت

وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک نے اسلام آباد قبرستان کی طرز پر پورے پشاور شہر کیلئے قبرستان مختص کرنے کیلئے300سے500 کنال اراضی کی نشاندہی کرنے کی ہدایت کی ہے۔انہوں نے تنازعات کے حل،ایک ارب روپے کی وصولی اور اسے شکایت کنندہ کو واپس کرنے جیسی اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرنے پر وزیر اعلیٰ کمپلینٹ سیل کو قانونی تحفظ فراہم کرنے کیلئے ضروری تیاری کرنے کی بھی ہدایت کی ہے۔یہ ہدایات انہوں نے وزیر اعلیٰ سیکرٹریٹ پشاور میں واقع چیف منسٹر کمپلینٹ سیل کے اچانک دورے کے دوران دیں۔اس موقع پر دوسروں کے علاوہ صوبائی وزیر ایکسائز و ٹیکسیشن میاں جمشید الدین کاکا خیل،ممبران صوبائی اسمبلی شوکت یوسفزئی،ارباب جہانداد خان اورانتظامی سیکرٹریز بھی وزیر اعلیٰ کیساتھ تھے۔وزیر اعلیٰ نے ٹیلی فون کال کے ذریعے براہ راست کئی شکایت کنندہ کی شکائتیں بھی وصول کیں اور ان کے مسائل کے حل کے لئے قانونی معاونت فراہم کرنے کی ہدایات جاری کیں۔وزیر اعلیٰ شکایات سیل کے انچارج دلروز خان نے وزیر اعلیٰ کو شکایات سیل کے کام اور تنازعات کے حل کیلئے اختیار کردہ طریقہ کار،وصولی اور شکایت کنندگان کو وصول شدہ رقم کی واپسی کے متعلق بریفنگ دی۔ وزیر اعلیٰ کو مزید بتایا گیا کہ وزیر اعلیٰ شکایات سیل کی قانونی مداخلت اور تنازعات کے تصفیہ کی وجہ سے مختلف لوگوں سے ایک ارب روپے کی وصولیاں کی گئیں اور غریب لوگوں کے معمولی نوعیت کے تقریباً22000کیسز حل ہوئے۔وزیر اعلیٰ نے تمام صوبائی وزراء کو شکایات سیل کادورہ کرنے اور عوام کی شکایات کے ازالے کی بھی ہدایت کی اور کہا کہ ان کی حکومت بدعنوانی کی سرگرمیوں کے لئے کوئی جگہ نہیں چھوڑے گی۔انہوں نے کہا کہ ان کی حکومت نے صوبے میں شفاف طرز حکمرانی متعارف کرایا اور اقرباء پروری کو ختم کیا جو ایک حقیقی تبدیلی ہے جس کی وجہ سے ماضی میں کرپشن،بدعنوانی اور سیاست زدہ پٹواری اور پولیس نظام کی وجہ سے صوبے کے نا امید عوام نے سکھ کا سانس لیا۔ پرویز خٹک نے ہدایت کی کہ بدعنوان عناصر کو تبدیل نہ کریں بلکہ معاشرے میں اس برائی کو پھیلنے سے روکنے کے لئے ان کو گھر بھیجنا ہی واحد حل ہے۔انہوں نے کہا کہ انصاف فراہم کرنا ایک مقدس فریضہ ہے لیکن اسے نظر بھی آنا چاہیے جو کہ ان کی حکومت نے صوبے میں شفاف طرز حکمرانی کے نظام کے ذریعے ممکن بنایا۔انہوں نے عوام کو بھی اپنی شکایات ثبوت کے ساتھ چیف منسٹر کمپلینٹ سیل میں درج کرنے کو کہا۔انہوں نے کمپلینٹ سیل کی کارکردگی کو سراہا تاہم انہوں نے اس کی کارکردگی میں مزید تیزی لانے کی ہدایت کی تاکہ لوگوں کے مسائل حل ہو سکیں انہوں نے یقین دلایا کہ ان کی حکومت کرپشن اور بدعنوان عناصر کے خلاف سخت کارروائی کرنے میں ایک لمحہ بھی ضائع نہیں کرے گی۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

w

Connecting to %s