باڑہ اکا خیل شین درنگ کے علاقے میں  دوبچوں کی موت ، ایف ڈبلیو اوکی غیر ذمہ داری کا نتیجہ ہے: اہل علاقہ

 گزشتہ روز شین درنگ اکا خیل میں فرٹیئر روڈ کے قریب معروف کنسٹرکشن کمپنی ایف ڈبلیو او کی جانب سے گاؤں کے وسط میں تعمیراتی کام کے دوران نکالی گئی تالاب نما کدائی نے دو معصوم بچوں کی جان لے لی ۔واقعے کے بعد علاقائی سیاسی وسماجی حلقوں نے ایف ڈبلیو کو حدف تنقید بناتے ہوئے باڑہ میں تعینات پاک فوج کے سیکٹر کمانڈر،پولیٹیکل ایجنٹ خیبر اور متعلقہ دیگرانتظامی اداروں سے گزشتہ روز پیش ہونے والے واقعے کی تحقیقات کرانے کا مطالبہ کیا ہے ۔گاؤں کے مکینوں کا کہنا ہے کہ ایف ڈبلیو والے اپنے ذاتی منافع خوری کے لئے مقامی آبادی کو یرغمال بنا رہے ہیں اور سڑک کی تعمیر کے لئے ہموار زمینوں سے مٹی اٹھا کر قابل کاشت زمینوں کو کھنڈرات میں تبدیل کر رہے ہیں جس کا سختی سے نوٹس لینا چاہئے ۔


مقامی آبادی کے مشران کا کہنا ہے کہ اگر اس واقعے کا نوٹس نہیں لیا گیا تو ایف ڈبلیو کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کیا جائے گا اور سڑک پر تعمیراتی کام بھی بند کر دیں گے ۔مقامی لوگوں کو یہ بھی کہنا ہے کہ گزشتہ سال بھی ایک معصوم بچہ ان ہی سڑک کی تعمیر کے لئے نکالی گئی گہرے کڈ میں ڈوب کر جاں بحق ہوا جس کا ایف ڈبلیو کے ذمہ داروں نے کوئی نوٹس نہیں لیا ۔ 


واضح رہے کہ گزشتہ روز پیش ہونے والے دلخراش واقعے میں قبیلہ زخہ خیل کے دو معصوم بھائی ندیم اور نور عالم پسران نور اسلم نے ان کے گھر آئے ہوئے مہمان ساتھی الف خان کو بچانے کی کوشش میں اپنی جانوں کی قربانی دیدی ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s