قبائلی صحافی دوست راحت شنواری کا فاٹا اصلاحات بارے خیال 

قبائلی عوام کے تقدیر سے متعلق وزارت سیفران میں ایک اہم اجلاس سے متعلق چند باتیں
بڑے افسوس اور شرم سے کہناپڑ رہا ہے کہ اب فاٹا کے اراکین پارلیمنٹ کو فاٹا اصلاحات کے مشاورتی عمل میں شامل کیا جائے گا۔فاٹا کو کم از کم پانچ سال تک رواج قانون کے تحت چلایاجائے گا۔ ایک اچھی شرط فاٹا اراکین کی جانب سے کہ جب تک ترقیاتی پیکج پر عمل درامد نہیں کیا جائے گا اس وقت تک فاٹا خیبر پختونخواء میں ضم نہیں ہوگا۔۔۔۔۔۔۔۔۔ 100 ارب کے ترقیاتی پیکج، 200 لیویز کی بھرتیوں سمیت چند دیگر اہم منصوبوں پر عمل در امد تک فاٹا کے انضمام کا فیصلہ نہیں ہوگا، فاٹا اراکین پارلیمنٹ۔

ایک حقیقت۔۔۔ بعض پارلیمینٹرئین سمیت، صحافی، وکلا، نام نہاد طلباء تنظیمیں فاٹا کے تقدیر پر کھیلنا شروع ہوچکے ہیں۔۔ کسی کے موقف کی تائید یا تردید کرنے سے پہلے غریب عوام کوذہن میں رکھیں۔۔۔۔۔۔۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s